( آہ )

فارسی زبان کا لفظ ہے ۔۔ اس کے معنی ہوتے ہیں ( افسوس )
یہ لفظ مونث استعمال ہوتا ہے ، یعنی آپ کہیں گے میری آہ نکل گئی ۔۔۔۔ یہ نہیں کہیں گے میرا آہ نکل گیا ۔۔
جسم کو چوٹ لگے یا روح کو ۔۔۔۔ ہڈی ٹوٹے یا دل ۔۔۔۔۔ گھائل جسم ہو یا احساس تو منہ سے نکلتی ہے ۔۔۔ آہ
زخم پہ سپرٹ لگے
کوئی تھک کے صوفے پہ گرے
تو منہ سے نکلتی ہے آہ
××××××××××××××××××××××
جب لوگ نا اہل کو اہل بنارہے ہیں‌
جب لوگ شیطان کو منارہے ہیں‌
جب بت کو خدا بنارہے ہیں
تو منہ سے نکلتی ہے آہ۔