کراچی (پ ر) نظام مصطفی پارٹی کے سیکریٹری جنرل سابق رکن قومی اسمبلی صاحبزادہ سید حامد سعید کاظمی نے اتحاد اہلسنت کے لئے ہونے والی کاوشوں کے حوالے سے کراچی کا مختصر دورہ کیا اور پارٹی کے سربراہ حاجی محمد حنیف طیب سے تبادلہ خیال کیا۔ پارٹی کے صدر اور جنرل سیکریٹری میں اس امر پر اتفاق رائے پایا گیا کہ اہلسنت کی متحدہ قوت ہی نظام مصطفی کے نفاذ اور ملکی سالمیت کے تحفظ کے لئے موٴثر کردار ادا کر سکتی ہے اس موقع پر حاجی محمد حنیف طیب نے کہا کہ جب بھی اتحاد کی بات ہوئی ہم نے شرائط لگانے سے گریز کیا تاکہ عوام کی خواہشات کے مطابق اہلسنت کی تمام قوتیں ایک ہوجائیں اسی مقصد کی خاطر جماعت اہلسنت کی قیادت کو ہم دونوں (صدر اور جنرل سیکریٹری) نے اپنے استعفے بھی پیش کردئیے تھے۔ صاحبزادہ حامد سعید کاظمی کے مطابق عید کے بعد نظام مصطفی پارٹی کا اعلیٰ سطح کا ہنگامی اجلاس بلانے کے بارے میں حاجی محمد حنیف طیب سے مشورہ ہو گیا ہے اس سلسلے میں صاحبزادہ کاظمی نے لاہور میں ہونے والے اجلاس کو انتہائی تسلی بخش قرار دیتے ہوئے پارٹی سربراہ حاجی محمد حنیف طیب کو اجلاس کی تمام تفصیلات سے آگاہ کیا اس موقع پر پارٹی کے رہنما شبیر احمد قاضی اورالحاج محمد رفیع بھی موجود تھے جبکہ جماعت اہلسنت پاکستان کے رہنما محمد حسین لاکھانی خصوصی طور پر اجلاس میں شریک ہوئے تمام رہنماؤں نے اہلسنت کے اتحاد کو وقت کا اہم ترین تقاضا قرار دیتے ہوئے کہا کہ غیر مشروط کوششیں ہی عوام اہلسنت کو متحدہ قوت فراہم کر سکتی ہیں۔