بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِيْمِ
صُمٌّۢ بُكۡمٌ عُمۡىٌ فَهُمۡ لَا يَرۡجِعُوۡنَ ۙ‏
بہرے ہیں ‘ گونگے ہیں اندھے ہیں ‘ پس وہ (ہدایت کی طرف) رجوع نہیں کریں گے
اللہ تعالیٰ کا ارشاد ہے : بہرے ہیں ‘ گونگے ہیں اندھے ہیں ‘ پس وہ (ہدایت کی طرف) رجوع نہیں کریں گے (البقرہ : ١٨)
یعنی حق کو سننے سے بہرے ہیں ‘ حق بولنے سے گونگے ہیں اور حق دیکھنے سے اندھے ہیں ‘ اللہ تعالیٰ نے کان اس لیے دئیے ہیں کہ وہ حق کو سنیں ‘ سو جس نے حق کو سنا ‘ وہ خواہ کان رکھتا ہو اللہ کے نزدیک بہرا ہے اور زبان کلمہ حق بولنے کے لیے دی ہے ‘ سو جس نے کلمہ حق نہیں بولا وہ خواہ زبان رکھتا ہو وہ اللہ کے نزدیک گونگا ہے اور جس نے حق کو نہیں دیکھا وہ خواہ آنکھیں رکھتا ہے وہ اللہ کے نزدیک اندھا ہے ‘ یہ لوگ اب اس ہدایت کی طرف نہیں لوٹیں گے جس کو ضائع کرچکے ہیں اور اس گمراہی کو ترک نہیں کریں گے جس کو اختیار کرچکے ہیں۔
[Tibyan-ul-Quran 2:18]