بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِيْمِ

قَالَ اِنَّهٗ يَقُوۡلُ اِنَّهَا بَقَرَةٌ لَّا ذَلُوۡلٌ تُثِيۡرُ الۡاَرۡضَ وَلَا تَسۡقِى الۡحَـرۡثَ ‌ۚ مُسَلَّمَةٌ لَّا شِيَةَ فِيۡهَا ‌ؕ قَالُوا الۡــٴٰــنَ جِئۡتَ بِالۡحَـقِّ‌ؕ فَذَبَحُوۡهَا وَمَا كَادُوۡا يَفۡعَلُوۡنَ

موسیٰ نے کہا : بیشک اللہ فرماتا ہے بالتحقیق وہ ایسی گائے ہے جو نہ محنت کرنے والی ہے کہ زمین میں ہل چلاتی ہو اور نہ وہ کھیتی میں پانی دیتی ہے وہ صحیح سالم اور بےداغ ہے ‘ وہ پکار اٹھے کہ اب آپ نے ٹھیک بات بتائی ہے۔ پھر انہوں نے اس گائے کا ذبح کیا اور وہ یہ کام کرنے والے نہ تھے

[Tibyan-ul-Quran 2:71]