أَعـوذُ بِاللهِ مِنَ الشَّيْـطانِ الرَّجيـم

بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِيْمِ

قُلۡ اَطِيۡعُوا اللّٰهَ وَالرَّسُوۡلَ‌‌ ۚ فَاِنۡ تَوَلَّوۡا فَاِنَّ اللّٰهَ لَا يُحِبُّ الۡكٰفِرِيۡنَ

ترجمہ:

آپ کہیے اللہ کی اطاعت کرو اور رسول کی پھر اگر وہ روگردانی کریں تو بیشک اللہ کافروں کو دوست نہیں رکھتا

تفسیر:

اللہ تعالیٰ کا ارشاد ہے : آپ کہئے اللہ کی اطاعت کرو اور رسول اللہ کی ‘ پھر اگر وہ روگردانی کریں تو بیشک اللہ کافروں کو دوست نہیں رکھتا۔

یہ آیت اس حکم کی تاکید ہے ” میری اتباع کرو “ علامہ ابوالحیان اندلسی نے لکھا ہے کہ حضرت ابن عباس (رض) نے فرمایا جب یہ آیت نازل ہوئی : آپ کہئے کہ اگر تم اللہ کی محبت کے دعوے دار ہو تو میری اتباع کرو اللہ تمہیں اپنا محبوب بنا لے گا “۔ تو عبداللہ بن ابی نے اپنے اصحاب سے کہا کہ محمد (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) اپنی اطاعت کو اللہ کی اطاعت کی مثال قرار دیتے ہیں اور یہ حکم دیتے ہیں کہ ان سے ایسی محبت کی جائے جیسی عیسیٰ بن مریم (علیہ السلام) سے محبت کی گئی تھی ‘ تو یہ آیت نازل ہوئی آپ کہئے کہ اللہ کی اطاعت کرو اور رسول کی پھر اگر وہ روگردانی کریں تو بیشک اللہ کافروں کو دوست نہیں رکھا۔ (البحر المحیط ج ٣ ص ١٠٤ مطبوعہ دارالفکر ‘ بیروت ‘ ١٤١٢ ھ)

تفسیر تبیان القرآن – سورۃ 3 – آل عمران – آیت 32