أَعـوذُ بِاللهِ مِنَ الشَّيْـطانِ الرَّجيـم

بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِيْمِ

اُولٰٓئِكَ هُمُ الۡـكٰفِرُوۡنَ حَقًّا‌ ۚ وَ اَعۡتَدۡنَا لِلۡكٰفِرِيۡنَ عَذَابًا مُّهِيۡنًا ۞

ترجمہ:

یہ وہ لوگ ہیں جو یقینا کافر ہیں اور ہم نے کافروں کے لیے ذلت آمیز عذاب تیار کر رکھا ہے

تفسیر:

اللہ تعالیٰ کا ارشاد ہے : یہ وہ لوگ ہیں جو یقینا کافر ہیں اور ہم نے کافروں کے لیے ذلت آمیز عذاب تیار کر رکھا ہے۔ (النساء : ١٥١) 

اس آیت میں فرمایا کہ یہ یہود اور نصاری جو آپ کی نبوت کے منکر ہیں یہ یقینا کافر ہیں ‘ خواہ یہ اپنے آپ کو مومن کہتے رہیں ان کے خود کو مومن کہنے کا کوئی اعتبار نہیں ہے ‘ یہ عذاب سب سے پہلے داخل ہوں گے ‘ اور وہ عذاب ان کو ذلیل کرنے والا ہوگا ‘ اس میں یہ ظاہر فرمایا ہے کہ بعض گنہ گار مسلمانوں کو پاک کرنے کے لیے عذاب میں داخل ہوں گے۔ ثانیا “ یہ کہ وہ عذاب ان بعض مسلمانوں کی تطہیر کے لیے ہوگا اور صورۃ ہوگا۔ اس کے برخلاف کافروں کو جو عذاب ہوگا ہو حقیقۃ عذاب ہوگا اور ان کو ذلیل کرنے کے لیے ہوگا۔

تبیان القرآن – سورۃ نمبر 4 النساء آیت نمبر 151