شاہ ولی اللہ محدث دہلوی کا اپنے والد کی قبر سے فیض لینا

شاہ ولی اللہ محدث دہلوی علیہ الرحمہ کا اپنے والد کی قبر سے فیض لینا

شاہ ولی اللہ محدث دہلوی علیہ الرحمہ لکھتے ہیں:

"جب میں والد گرامی (شاہ عبدالرحیم علیہ الرحمہ) کے مزار مبارک پر مراقبہ کرتا تو مسائل توحید حل ہو جاتے، جذب کا راستہ کھل جاتا، سلوک میں سے وافر حصہ میسر آتا اور وجدانی علوم کا ذہن میں ہجوم لگ جاتا، مذاہب اربعہ اور ان کے اصول فقہ کی کتابوں اور احادیث جن سے وہ استدلال کرتے ہیں، کے مطالعے کے بعد مجھے نور بصیرت سے معلوم ہوا کہ فقہائے محدثین کی روش اختیار کی جائے۔”

[انفاس العارفین (مترجم) ص 395 و 396]

پتہ نہیں ایسی باتیں غیر مقلدین حضرات کو ہضم ہو جائیں گی یا شاہ ولی اللہ محدث دہلوی علیہ الرحمہ سے برأت کا اعلان کر دیں گے؟؟؟ 😜😜

رضاءالعسقلانی غفراللہ لہ

جواب دیجئے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.