فضائل سیدنا امیر معاویہ رضی اللہ عنہ

پوسٹ نمبر 1

سیدنا امیر معاویہ رضی اللہ عنہ کی صحبت عظیم

سیدنا امیر معاویہ رضی اللہ عنہ فرماتے ہیں:

میں نے رسول اللہ صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کو دیکھا آپ صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم سیدنا امام حسن رضی اللہ عنہ کی زبان یا ہونٹ مبارک کا بوسہ لے رہے تھے۔

بے شک جس زبان یا ہونٹ کو رسول اللہ صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم نے چوما اسے ہرگز عذاب نہیں دیا جائے گا۔”

[مسند احمد (ط الرسالۃ) ج 28 ص 62 رقم الحدیث 16848]

امام ہیثمی علیہ الرحمہ اس حدیث کی سند کے بارے میں فرماتے ہیں:

“اس حدیث کو امام احمد نے روایت کیا ہے اور اس (حدیث) کے رجال صحیح (حدیث) کے رجال ہیں سوائے عبدالرحمن بن ابی عوف کے اور وہ ثقہ ہیں۔”

[مجمع الزوائد ج 9 ص 177 رقم الحدیث 15047]

شعیب الارنوؤط صاحب نے بھی اس حدیث کی سند کو صحیح قرار دیا ہے۔

[حاشیہ مسند احمد (ط الرسالۃ) ج 28 ص 62 رقم الحدیث 16848]

اس حدیث سے ثابت ہوا ہے کہ سیدنا امیر معاویہ رضی اللہ عنہ سے خود فضائل اہل بیت عظام رضی اللہ عنہم ثابت ہیں اور اس سے ایک اور بات بھی واضح ہوتی ہے کہ سیدنا امیر معاویہ رضی اللہ عنہ کی سرکار مدینہ علیہ السلام سے صحبت عظیم بھی ثابت ہے جو تمام دنیا کے ثقہ ترین تابعین کی تمام عبادات سے افضل ہے۔

اللہ عزوجل ہمیں اہل بیت و صحابہ رضی اللہ عنہم کا سچا حب دار بنائے۔(آمین)

یوم وصال سیدنا امیر معاویہ رضی اللہ عنہ

۲۲ رجب المرجب ٦۰ ھ

خادم اہل بیت و صحابہ رضی اللہ عنہم

رضاءالعسقلانی غفراللہ لہ

۲۲ رجب المرجب ١٤٤۰ھ