حقیقت ایمان

حقیقت ایمان

سیدنا عبداللہ بن عمر رضی اللہ عنہ نے فرمایا:

"کوئی بندہ اس وقت تک حقیقت ایمان تک نہیں پہنچ سکتا جب تک کہ لوگ دین پر اس کی استقامت دیکھ کر اسے بے وقوف نہ سمجھیں۔”

[حلیۃ الاولیاء (مترجم) ج 1 ص 538 رقم 1068]

اسی روایت کو امام ابن ابی شیبہ علیہ الرحمہ نے بھی روایت کیا ہے۔

[المصنف ابن ابی شیبہ ج 7 ص 117 رقم الحدیث 34630]

اس روایت کو امام ابن ابی شیبہ علیہ الرحمہ نے امام وکیع علیہ الرحمہ سے روایت کیا ہے اور امام ابونعیم علیہ الرحمہ کی سند بھی امام وکیع علیہ الرحمہ پر مل کر ایک ہو جاتی ہے۔ اس لیے اس روایت کی سند بالکل صحیح ہے۔

واللہ اعلم

رضاءالعسقلانی غفراللہ لہ

۲٧ رجب المرجب ١٤٤۰ھ

جواب دیجئے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.