أَعـوذُ بِاللهِ مِنَ الشَّيْـطانِ الرَّجيـم

بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِيْمِ

كَانُوۡا لَا يَتَـنَاهَوۡنَ عَنۡ مُّنۡكَرٍ فَعَلُوۡهُ ‌ؕ لَبِئۡسَ مَا كَانُوۡا يَفۡعَلُوۡنَ‏ ۞

ترجمہ:

وہ ایک دوسرے کو اس برے کام سے نہیں روکتے تھے جو انہوں نے کیا تھا ‘ وہ کیسا برا کام تھا جو وہ کرتے تھے۔

تفسیر:

اللہ تعالیٰ کا ارشاد ہے : وہ ایک دوسرے کو اس برے کام سے نہیں روکتے تھے جو انہوں نے کیا تھا ‘ وہ کیسا برا کام تھا جو وہ کرتے تھے۔ (المائدہ : ٧٩) 

بنواسرائیل حرام کام اور گناہ کرنے والوں کو منع نہیں کرتے تھے ‘ اللہ تعالیٰ قسم کھا کر فرماتا ہے کہ ان کا گناہوں سے نہ روکنا حرام کاموں کو کرنا اور انبیاء (علیہم السلام) کو قتل کرنا بہت برا کام تھا۔ 

اس آیت سے معلوم ہوتا ہے کہ برائی سے نہ روکنے کی تبلیغ میں وہ سب شریک تھے۔ نیز ‘ یہ آیت اس پر دلالت کرتی ہے کہ مجرموں کے ساتھ ملنا جلنا اور سوشل اور سماجی روابط رکھنا بھی ناجائز اور حرام ہے ‘ اور ان سے ترک تعلق کرنا واجب ہے۔ ہم نے اس آیت کی تفسیر میں اور اس سے پہلے المائدہ : ٦٣‘ کی تفسیر میں جن احادیث اور آثار کا ذکر کیا ہے ‘ ان کا بھی یہی تقاضا ہے۔

تبیان القرآن – سورۃ نمبر 5 المائدة آیت نمبر 79