شب قدر کے نوافل

٭ چار رکعت نفل پڑھے۔ ہر رکعت میں سورۂ فاتحہ کے بعد سورۂ تکاثر ایک اور اس کے بعد سورۂ اخلاص تین مرتبہ پڑھے تو موت کی سختیوں سے آسانی ہوگی اور عذاب قبر سے محفوظ رہے گا (بحوالہ: نزہۃ المجالس، جلد اول، ص 129، فضائل الایام والشہور، ص 441، مطبوعہ مکتبہ نوریہ رضویہ، فیصل آباد پنجاب)

٭ دو رکعت نفل پڑھے کہ ہر رکعت میں سورۂ فاتحہ کے بعد سورۂ اخلاص سات مرتبہ پڑھے۔ سلام پھیرنے کے بعد سات مرتبہ ’’استغفر اﷲ‘‘ پڑھے تو اپنی جگہ سے اٹھے گا کہ اس پر اور اس کے والدین پر رحمت خدا برسنی شروع ہوجائے گی۔ (تفسیر یعقوب چرخی، فضائل الایام والشہور، ص 441، مطبوعہ مکتبہ نوریہ رضویہ، فیصل آباد کراچی)

٭ چار رکعت نفل اس طرح پڑھے کہ ہر رکعت میں سورۂ فاتحہ کے بعد سورۂ قدر ایک مرتبہ اور سورۂ اخلاص ستائیس مرتبہ پڑھے تو یہ شخص گناہوں سے ایسا پاک ہوجاتا ہے کہ گویا آج ہی اپنی ماں کے پیٹ سے پیدا ہوا ہے اور اس کو اﷲ تعالیٰ جنت میں ہزار محل عنایت فرمائے گا (بحوالہ: فضائل الایام والشہور، ص441، مکتبہ نوریہ رضویہ فیصل آباد پنجاب)

٭ دو رکعت نفل پڑھے کہ ہر رکعت میں سورۂ فاتحہ کے بعد سورۂ قدر ایک مرتبہ اور سورۂ اخلاص تین مرتبہ پڑھے تو اﷲ تعالیٰ اس کو شب قدر کا ثواب عطا کرے گا اور اس کے نفل قبول فرمائے گا اور اس کو حضرت ادریس، حضرت شعیب، حضرت دائود، حضرت ایوب اور حضرات نوح علیہم السلام کا ثواب عطاء فرمائے گا اور اس کو جنت میں مشرق سے مغرب تک ایک شہر عنایت فرمائے گا (بحوالہ: فضائل الایام والشہور، ص442، مطبوعہ مکتبہ نوریہ رضویہ، فیصل آباد، پنجاب)

٭ چار رکعت نفل اس طرح پڑھے کہ ہر رکعت میں سورۂ فاتحہ کے بعد سورۂ قدر تین مرتبہ اور سورۂ اخلاص پچاس مرتبہ پڑھے پھر اس نماز بعد سجدہ میں جاکر ایک دفعہ سبحان اﷲ والحمد ﷲ ولا الہ الا اﷲ واﷲ اکبر پڑھے پھر اس کے بعد جو دعا مانگے قبول ہوگی اور اسے اﷲ تعالیٰ بے شمار نعمتیں عطا فرمائے گا اور اس کے سبب اس کے سب گناہ بخش دے گا (بحوالہ: فضائل الایام والشہور، ص 442، مطبوعہ مکتبہ نوریہ رضویہ فیصل آباد پنجاب)