قیامت کا بیان

قیامت کا بیان :

عقیدہ :بیشک ایک دن زمین و آسمان ،جن و انسان اور فرشتے اور دیگر تمام مخلوق فنا ہو جائے گی اس کا نام قیامت ہے ۔اس کا واقع ہو نا حق ہے اور اس کا منکر کافر ہے ۔(قیامت آنے سے قبل چند نشانیاں ظاہر ہونگی :)

قیامت آنے سے پہلے چند نشانیاں ظاہر ہوں گی :

دنیا سے علم اٹھ جائے گا یعنی علماء باقی نہ رہیں گے ،جہالت پھیل جائے گی ،بے حیائی اور بد کاری عام ہوجائے گی ،عورتوں کی تعداد مردوں سے زیادہ ہوجائے گی ،بڑے دجّال کے سوا تیس دجّال اور ہونگے جو نبوت کادعویٰ کریں گے حالانکہ حضور علیہ السلام کے بعد کوئی نبی نہیں آسکتا ،مال کی کثرت ہوگی ،عرب میں کھیتی ،باغ اور نہریں جاری ہوجائیں گی ،دین پر قائم رہنا بہت دشوار ہوگا ،

وقت بہت جلد گزرے گا ،زکوٰۃ دینا لوگوں پر گراں ہوگا ،لوگ دنیا کے لیے دین پڑھیں گے ،مرد عورتوں کی اطاعت کریں گے ،والدین کی نافرمانی زیادہ ہوگی ،دوست کو قریب اور والد کو دور کریں گے ،مسجدوں میں آوازیں بلند ہونگی ،بدکار عورتوں اور گانے بجانے کے آلات کی کثرت ہوگی ،شراب نوشی عام ہوجائے گی ،فاسق اور بدکار سردار و حاکم ہونگے ،پہلے بزرگوں پر لوگ لعن طعن کریں گے ،درندے ،کوڑے کی نوک اور جوتے کے تسمے باتیں کریں گے ۔(ماخوذاز بخاری ،مسلم ،ترمذی )

جواب دیجئے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.