یارسول اللہ شفقت کیجئے

یا رسول اللہ شفقت کیجئے

یا رسول اللہ شفقت کیجئے

عاصیوں پر نظرِ رحمت کیجئے

دافع ِجملہ بلا ہیں آپ ہی

غم کو آقا جلد رخصت کیجئے

روز ِ محشر لب پہ ہوگی یہ صدا

شافعِ اُمّت شفاعت کیجئے

در کے ٹکڑوں سے گذارا ہے مرا

رزق میں میری بھی وُسعت کیجئے

علم نافع ہو عطا مجھ کو حضور

دور مجھ سے اب جہالت کیجئے

قلبِ مُضطر کی صداہے بس یہی

طیبہ میں مَدفن عنایت کیجئے

جارہاہوں پھر مدینے سے حضور

جلد پھر آئوں وہ صورت کیجئے

دامنِ شاکرؔ ہے پھیلا اے کریم

صدقہ اچھوں کا عنایت کیجئے

جواب دیجئے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.