چھٹی شرط:- صحت

٭ یعنی جمعہ پڑھنے مسجد تک آسکے۔

مسئلہ: مریض(بیمار) پر جمعہ فرض نہیں ۔ مریض سے مراد وہ بیمار ہے جو جمعہ کے لئے مسجد تک نہ جاسکے یا اگر گیا تو مرض بڑھ جائے گا یا دیر میں اچھا ہوگا ۔ ( غنیہ ، بہار شریعت)

مسئلہ: شیخ فانی یعنی بہت ہی بوڑھا جو ضعف و علالت کی وجہ سے نحیف و ناتواں ہو وہ مریض کے حکم میں ہے ۔اس پر جمعہ فرض نہیں ۔ ( درمختار، بہار شریعت، فتاوٰی رضویہ جلد ۱ ، ص ۶۳۶)

مسئلہ: جو شخص مریض کا تیماردار ہے اور وہ جانتا ہے کہ جمعہ کو جائے گا تو مریض دقتوں میں پڑجائے گا اور اس کا کوئی پرسانِ حال نہ ہوگا تو اس پر جمعہ فرض نہیں۔(درمختار،بہار شریعت)

نوٹ:- اسپتال میں کسی سیریس (Serious) مریض کی تیمارداری کے لئے رہنے والے پر جمعہ نہیں اگر اس مریض کو اکیلا چھوڑنے میں مریض کا دقّت میں پڑجانے کا اندیشہ ہے ۔

مسئلہ: یک چشم اور جس کی نگاہ کمزور ہو اس پر جمعہ فرض ہے ۔(درمختار، ردالمحتار)

مسئلہ: وہ نابینا ( اندھا) جو خود مسجد جمعہ تک بلا تکلف نہ جاسکے اس پر جمعہ فرض نہیں۔ بعض نابینا بلا تکلف بغیر کسی کی مدد کے بازاروں ، راستوں پر چلتے پھرتے ہیں اور جس مسجد میں چاہیں بلا پوچھے جاسکتے ہیں ان پرجمعہ فرض ہے ۔( درمختار،ردالمحتار)

مسئلہ: اپاہج پر جمعہ فرض نہیں اگرچہ کوئی ایسا ہو کہ اسے اٹھاکر مسجد تک لے جائے پھر بھی اس اپاہج پر جمعہ فرض نہیں ۔ ( ردالمحتار، بہار شریعت جلد ۴ ، ص ۱۰۱)

مسئلہ: جس کاایک پاؤںکٹ گیا ہو یافالج سے بیکار ہوگیا ہو اگر وہ مسجد تک جاسکتا ہے تو اس پر جمعہ فرض ہے ورنہ نہیں ۔ ( درمختار)