اللہ کی ذات و صفات

عقیدہ:۔ اللہ ایک ہے ،پاک اور بے مثل ، بے عیب ہے ۔ ہر کمال و خوبی کا جامع ہے۔ وہ ہمیشہ سے ہے اور ہمیشہ رہے گا ۔ اس کے سوا جو کچھ ہے ،پہلے نہ تھاجب اس نے پیدا کیا تو ہوا ۔ وہ کسی بھی بات میں کسی کا محتاج نہیں اور سب اسی کے محتاج ہیں ۔ وہ سب کا مالک ہے جوچاہے کرے ۔ بغیر اس کے چاہے ذرّہ ہل نہیں سکتا ۔ سب اس کے بندے ہیں،وہ اپنے بندوں پر ماں، باپ سے زیادہ مہربان ،رحم فرمانے والا، گناہ بخشنے والا، توبہ قبول فرمانے والا ہے ۔ عزت و ذلت ، مال و دولت ، سب اسی کے قبضے میں ہے ۔

عقیدہ:۔ہدایت و گمرہی اسی کی جانب سے ہے ، جسے چاہے ہدایت دے اور جسے چاہے گمراہ کردے ، اس کا ہر کا م ،حکمت اور انصاف ہے ۔بندے کی سمجھ میں آئے یا نہ آئے۔ بندوںپر اس کے احسانات بے انتہاہیں ۔

عقیدہ:۔ وہی اللہ د اِس لائق ہے کہ صرف اسی کی عبادت کی جائے ۔ اس کے سوا دوسراکوئی بھی عبادت کے لائق نہیں ۔

عقیدہ:حقیقی بادشاہ اللہد ہی ہے اور وہی علیم و حکیم ہے ۔ کوئی چیز اللہ د کے علم سے باہر نہیں ۔ دلوں کے خطروں اور وسوسوں کی بھی خبر رکھتا ہے ۔ اس کے علم کی کوئی انتہا نہیں ۔

عقیدہ:اللہ جو چاہے ،جیسا چاہے کرے۔ کسی کا اس پر کوئی دبائو نہیں ، اور نہ کوئی اس کے ارادے سے اس کو روکنے والاہے ،بندوں کے اچھے کام سے خوش ہوتا ہے اور برے کام سے ناراض ہوتا ہے ۔

عقیدہ: حقیقۃً روزی پہونچانے والا ، اولاد عطا فرمانے والانیز ہر ضرورت پوری کرنے والا وہی ہے ۔فرشتے وغیرہ وسیلہ اور واسطہ ہیں ۔

عقیدہ: خدائے تعالیٰ کے لئے ہر عیب ناممکن بلکہ محال ہے ۔جیسے جھوٹ ، جہالت ، بھول ،ظلم وغیر ہ تمام برائیاںخدا کے لئے محال ہیں ۔اور جو یہ مانے کہ خداجھوٹ بول سکتا ہے ،لیکن بولتا نہیں،ایسا عقیدہ رکھنے والا گمراہ ہے کیونکہ گویاوہ مان رہا ہے کہ خدا عیبی تو ہے لیکن اپنا عیب ( جھوٹ ) چھپائے ہوئے ہے۔ ( معاذاللہ)