کیا داغ دھل سکتے ہیں

داغ لگنے کو تو لگ گیا مگر اب اسے دھلا جاسکتا ہے یا نہیں؟گئی ہوئی شوکت کو واپس لے سکتے ہیں یا نہیں؟رسوائی کے قعر عمیق سے نکل سکتے ہیں یا نہیں؟بدنامی ہمارا پیچھا چھوڑ سکتی ہے یا نہیں؟ہماری عزت ہمیں واپس مل سکتی ہے یا نہیں؟ذلت کے دلدل سے رہائی مل سکتی ہے یا نہیں؟دامن کو مزید داغدار ہونے سے بچایا جا سکتا ہے یا نہیں؟ پھر سے ہمیں محبت کی نظر سے دیکھا جا سکتا ہے یا نہیں؟اپنی شان کی بحالی ہو سکتی ہے یا نہیں؟مایوسیوں میں امید کی کرن نمودار ہو سکتی ہے یا نہیں؟

ہاں ہاں کیوں نہیں؟ اسکا واپس لانا ممکن بھی ہے ،ہمارے اختیار میں بھی ہے اور نہایت آسان بھی ہے،یہ سارا وبال اللہ اور رسول کے فرمان سے الگ ہونے سے کھڑا ہوا تو اس سے توبہ کرکے بھر اسی دائمی نجات کی راہ کو اپنا لیا جائے یقینا منصب کی بحالی ہو جائے گی

ممکن بھی ہے آسان بھی ۔ راہ نبی پر پلٹ کے دیکھو