الفصل الثانی

دوسری فصل

حدیث نمبر :717

روایت ہے حضرت سلمہ ابن اکوع سے ۱؎ فرماتے ہیں میں نے عرض کیا یارسول اﷲ میں شکاری آدمی ہوں۲؎ تو کیا ایک قمیض میں نماز پڑھ سکتا ہوں فرمایا ہاں بٹن لگادینا اگرچہ کانٹے ہی سے ہوں۳؎ (ابوداؤد) نسائی نے اسی کی مثل روایت کی۔

شرح

۱؎ آپ اسلمی ہیں،مدنی ہیں،کنیت ابومسلم ہے،آپ ان صحابہ میں سے ہیں جنہوں نے بیعت رضوان کے موقعہ پر دوبارہ بیعت کی۔مشہور بہادرہیں،پیدل لڑنے والوں میں بیمثال تھے،۸۰ سال عمر پائی، ۷۴ھ؁ میں مدینہ پاک میں وفات ہوئی۔

۲؎ اورشکار میں بھاگ دوڑبہت کرنا پڑتی ہے تہبند بھاگنے میں رکاوٹ ڈالتا ہے۔

۳؎ اس سے چند مسئلے معلوم ہوئے:ایک یہ کہ لمبی قمیض میں بغیرتہبند پائجامہ نماز جائز ہے۔دوسرے یہ کہ قمیض کے بٹن لگے رکھنا سنت مستحبہ ہے،اور اگرگریبان میں سے ستر نظر آئے تو واجب ہے۔تیسرے یہ کہ نماز میں اپنے سے بھی ستر چھپانا فرض ہے،اس سے بہت مسائل فقیہ مستنبط ہوسکتے ہیں۔