حدیث نمبر :728

روایت ہے حضرت ابی ابن کعب سے فرماتے ہیں ایک کپڑے میں نمازسنت ہے ۱؎ ہم یہ نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کے ساتھ کرتے تھے اور ہم پر عیب نہ لگایا جاتا تھا تب حضرت ابن مسعود نے فرمایا کہ یہ جب ہی تھا جب کپڑوں میں کمی تھی لیکن جب اﷲ نے گنجائش بخشی تو دوکپڑوں میں نمازبہتر ہے۲؎ (احمد)

شرح

۱؎ یہاں سنت سے مراد لغوی معنی ہیں،یعنی طریقہ کار یا یہ مطلب ہے کہ اس کا جواز سنت سے ثابت ہے،لہذا آپ کے اس فرمان اورسیدنا ابن مسعود کے فرمان میں تعارض نہیں۔

۲؎ یعنی بجائے ایک کے دوکپڑوں میں نمازبہتر ہے۔بعض احادیث میں ہے کہ عمامہ کی نماز بغیر عمامہ کی نماز سے ستّر درجہ افضل ہے،لہذا تین کپڑوں میں نماز بہت بہتر کیونکہ اس حدیث میں قمیض و پائجامہ کا ذکر آیا اس میں عمامہ کا دونوں پرعمل ہے۔

و صلی اللہ تعالٰی علٰی خیرخلقہٖ سیدنا محمد واصحابہٖ و سلم

(احمد یار خان،خطیب جامع مسجد غوثیہ گجرات،پاکستان)