(۹) بعض صفات باری تعالیٰ

۱۵۔ عن أبی ہریرۃ رضی اللہ تعالیٰ عنہ قال : إن رسول اللہ صلی اللہ تعالیٰ علیہ وسلم کان یدعو بہؤلاء الکلمات، أللّٰہم! أنتَ الأوّلُ فَلَیْسَ قَبْلَکَ شَیٌٔ وَ أنْتَ الآخِرُ فَلَیْسَ بَعْدَکَ شَیٌٔ ۔

حضرت ابوہریرہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روا یت ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ تعالیٰ علیہ وسلم ان کلمات طیبہ کے ذریعہ دعا کرتے ۔ أللّٰہم! أنت الأول فلیس قبلک شیٔ ،و أنت الآخر فلیس بعدک شیٔ ۔ رسالہ المبین ختم النبین ص ۱۱۷

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۱۵۔ السنن لابی داؤد، الادب، باب فی تغیر الاسم القبیح، ۲/۶۷۷

السنن الکبری للبیہقی ، ۱۰/۱۴۵ 

کتاب الاسماء و الصفات للبیہقی، ۸۰

المستدرک للحاکم ، کتاب الایمان ، ۱/۲۴ 

الاذکار النوویہ، ۲۵۹

کنز العمال لعلی المتقی، ۱۳۱۸ ، ۱/۲۶۳ 

موارد الظمئان للہیثمی، ۱۹۳۷

جمع الجوامع للسیوطی، ۵۰۶۸ 

الادب المفرد للبخاری ۸۱۱

التاریخ الکبیر للبخاری ، ۸/۲۲۸ 

شرح السنۃ للبغوی، ۳/۲۴۴

مشکوۃ المصابیح ، ۴۷۶۶ 

الکنی و الاسماء للدولابی، ۱/۷۴