الله عزوجل کے 3 ارشادات میں اپنے آج کل کا جائزہ ۔

💚 پڑھیں اور قرآن عظیم کی آفاقی، ابدی حقانیت و ہدایت کو جانیں اور اس کے ساتھ اپنی وابستگی کو مزید پختہ کریں

(1) أفأمن الذين مكروا السيئات أن يخسف بهم الله الأرض أو يأتيهم العذاب من حيث لا يشعرون ، أو يأخذهم في تقلبهم فما هم بمعجزين ، أو يأخذهم على تخوف فإن ربكم لرؤوف رحيم. “سورة النحل 45/46/47 .

تو خفیہ طور پر برے پروگرام بنانے والے ، بری تدابیر تیار کرنے والے کیا بے خوف ہو گئے ہیں اس سے کہ

اللہ ان کو زمین میں دھنسا دے ،

یا ان کو وہاں سے عذاب آن گھیرے جہاں سے وہ سوچ بھی نہیں سکتے ،

یا ان کے ہلنے جلنے کے دوران ہی ان کو پکڑ لے اور وہ ( اس گرفت و عذاب کو لانے سے اسے ) عاجز کر سکتے ہی نہیں ،

یا انہیں یکے بعد دیگرے مختلف خوفوں میں پکڑ لیا کرے ۔

تو ( اے اہل ایمان ) تمہارا رب یقینا شفیق بھی ہے اور رحیم بھی ۔

(2) : و ضرب الله مثلا قرية كانت أمنة مطمئنة يأتيها رزقها رغدا من كل مكان فكفرت بأنعم الله فأذاقها الله لباس الجوع و الخوف بما كانوا يصنعون “.سورة النحل الأية 112.

اور اللہ نے مثال بیان فرمائی ہے ایک بستی کی جو بڑی ہی پر امن اور مطمئن تھی ۔ اس کا رزق ہر طرف سے بڑے کھلے طور پر آتا تھا تو انہوں نے اللہ کی ان نعمتوں کی ناشکرگذاری کی تو اللہ نے انہیں ان کے کرتوتوں کی وجہ سے بھوک اور خوف کا لباس پہنا دیا ۔

فقیر خالد محمود آپ کی توجہ لفظ ” لباس ” کی طرف مبذول کرواتے ہوئے عرض کرتا ہے کہ وہ بھوک اور خوف معمولی پیمانے پر نہیں ہوں گے بلکہ جس طرح لباس مکمل طور پر ڈھانپ لیتا ہے بعینہ اسی طرح اس معاشرے کو لپیٹ میں لے لیں گے ۔

کرونا وائرس کی دہشت اور خوف سے کوئی کونا خالی ہے اور معیشت کا حال بھی سامنے ہے ۔

(3) : ” قل هو القادر على أن يبعث عليكم عذابا من فوقكم أو من تحت أرجلكم أو يلبسكم شيعا و يذيق بعضكم بأس بعض ، أنظر كيف نفصل الأيات لعلهم يفقهون. و كذب به قومك و هو الحق قل لست عليكم بوكيل. لكل نبإ مستقر و سوف تعلمون ” .سورة الأنعام 65/66/67.

آپ اعلان کر دیں کہ وہ ( اللہ ) مکمل قادر ہے اس پر کہ وہ تم پر کوئی عذاب تمہارے اوپر سے یا تمہارے قدموں کے تلے سے بھیج دے ۔ یا تمہیں مختلف جماعتوں میں بانٹ دے اور ایک دوسرے کی باہمی پکڑ میں دے دے ۔

(ملکی سطح پر مذہبی، سیاسی ، لسانی ، قبائلی ، گروہی ، جغرافیائی تقسیم اور اس کی شدت کے وبال روز مرہ کا مشاہدہ ہے )

🔍دیکھیئے تینوں آیات کس قدر صراحت و جامعیت کے ساتھ

موجودہ اضطرابی صورتحال کو بھی بیان کر رہی ہیں۔ اس کے اور اس طرح کے اور فتنوں ، عذابوں ، ابتلاءوں کے اسباب اور انسانی بے بسی کو بیان کر رہی ہیں ۔

🌺 سورة الأنعام کی آیت ان وباءوں، عذابوں کے آنے کی حکمت بھی بیان کر رہی ہے ۔

🌹 أنظر كيف نفصل الأيات لعلهم يفقهون.

دیکھ لیں ہم ان نشانیوں کو کس طرح تفصیلات کے ساتھ بیان کر رہے ہیں تاکہ یہ سمجھ جائیں ۔

🌹 و كذب به قومك و هو الحق قل لست عليكم بوكيل. لكل نبإ مستقر و سوف تعلمون

اور آپ کی قوم نے اس سب کو ( عملی طور پر ) جھٹلا دیا ہے حالانکہ یہ ( دین) حق ہے ۔

آپ تو برملا کہہ دیں میں تم پر وکیل تو ہوں نہیں ۔ ( میں نے اللہ کی خبریں تم تک پہنچانا تھیں سو پہنچا دیں ) ہر غیبی خبر کا ایک وقت مقرر ہے جلد ہی تمہیں پتہ لگ جائے گا ۔

🤲یا اللہ یا رب العالمین ، اس فقیر خالد محمود، اس کے والدین، اہل و عیال، بھائی بندوں اور جملہ پیاروں کو ہر طرح کے فتنہ ، عذاب، وباء، ابتلاء، شر ، مرض ، وائرس، تکلیف، ناپسندیدہ شی سے ہمیشہ اپنی امان میں رکھنا ۔

دین و دنیا و آخرت کی فلاح، عفو، عافیت اور سعادت نصیب رکھنا ۔

آمین آمین آمین یا رب العالمین