أَعـوذُ بِاللهِ مِنَ الشَّيْـطانِ الرَّجيـم

بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِيْمِ

فَلَا تَكُ فِىۡ مِرۡيَةٍ مِّمَّا يَعۡبُدُ هٰٓؤُلَاۤءِ ‌ؕ مَا يَعۡبُدُوۡنَ اِلَّا كَمَا يَعۡبُدُ اٰبَآؤُهُمۡ مِّنۡ قَبۡلُ‌ؕ وَاِنَّا لَمُوَفُّوۡهُمۡ نَصِيۡبَهُمۡ غَيۡرَ مَنۡقُوۡصٍ۞

ترجمہ:

اے مخاطب ! جن معبودوں کی یہ لوگ عبادت کرتے ہیں تم ان کے متعلق کسی شک میں نہ پڑنا۔ یہ ان کی محض اسی طرح عبادت کرتے جس طرح اس سے پہلے ان کے آبائو اجداد عبادت کرتے تھے اور بیشک ہم ان کو ان کو پورا حصہ دیں گے جس میں کوئی کمی نہیں ہوگی۔ ؏

تفسیر:

اللہ تعالیٰ کا ارشاد ہے : اے مخاطب ! جن معبودوں کی یہ لوگ عبادت کرتے ہیں، تم ان کے متلعق کسی شک میں نہ پڑنا یہ ان کی محض اسی طرح عبادت کرتے ہیں جس طرح اس سے پہلے ان کے آبائو اجداد عبادت کرتے تھے اور بیشک ہم ان کو ان کا پورا پورا حصہ دیں گے جس میں کوئی کمی نہیں ہوگی۔ (ھود : ١٠٩) 

کفار کے حصوں کا بیان

پہلے اللہ تعالیٰ نے سابقہ قوموں کے بت پرستوں کے احوال تفصیل سے بیان فرمائے پھر اس کے بعد بدبختوں اور نیک بختوں کے اخروی انجام کا ذکر فرمایا اور اس کے بعد اب نبی (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کی قوم کی طرف سلسلہ کلام کو متوجہ فرمایا اس آیت میں بظاہر رسول اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کو خطاب ہے لیکن مراد عام مخاطب ہے کیونکہ بت پرستوں کی عبادت کے باطل ہونے کے متعلق نبی (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کا شک کرنا تو کسی طرح متصور ہی نہیں ہے اور اس آیت میں یہ بتایا ہے کہ بت پرست جن بتوں کی عبادت کرتے ہیں ان کے پاس ان کی پرستش پر کوئی دلیل نہیں ہے وہ صرف اپنے آبائو اجداد کی اندھی تقلید کرتے ہیں۔ اس آیت میں اللہ تعالیٰ نے فرمایا ہے اور بیشک ہم ان کو ان کا پورا پور احصہ دیں گے جس میں کوئی نہیں ہوگی۔ اس ارشاد کے حسب ذیل محمل ہیں :

(١) ان کی بت پرستی کی سزا میں ہم نے ان کے لیے جو عذاب تیار کر رکھا ہے ان کو وہ عذاب پورا پورا دیا جائے گا اور اس میں کوئی کمی نہیں ہوگی۔

(٢) ہرچند کہ انہوں نے کفر کیا ہے اور حق سے رو گردانی کی ہے لیکن دنیا میں ان کے رزق اور معیشت کا جو حصہ ہے ہم اس میں کوئی کمی نہیں کریں گے۔

(٣) ان کو ہدایت پر لانے کے لیے دلائل مہیا کرنے، رسول کو بھیجنے، کتاب نازل کرنے اور ان کے شبہات کا ازالہ کرنے میں جو ان کا حصہ حصہ ہے ہم اس میں کوئی کمی نہیں کریں گے اور یہ بھی ہوسکتا ہے کہ یہ تینوں محامل مراد ہوں۔

تبیان القرآن – سورۃ نمبر 11 هود آیت نمبر 109