روزہ کی نیت

مسئلہ : سحری سے فارغ ہونے کے بعد نیت کریں اور یوں کہیں ’’نَوَیْتُ اَنْ اَصُوْمَ غَداً لِلّٰہِ تَعَالیٰ مِنْ فَرْضِ رَمَضَانَ ہٰذا‘‘یعنی میں نے نیت کی اللہ تبارک و تعالیٰ کے لئے اس رمضان کا فرض روزہ کل رکھنے کی۔

مسئلہ : اور اگررات میں نیت نہ کرسکے تو دن میں یہ کہے’’نَوَیْتُ اَنْ اَصُوْمَ ہٰذَا الْیَوْمَ لِلّٰہِ تَعَالیٰ مِنْ فَرْضِ رَمَضَانَ ہٰذَا‘‘ میں نے نیت کی آج کے دن اللہ کے لئے اس رمضان کا روزہ رکھنے کی۔

نیت کسے کہتے ہیں

مسئلہ : نیت دل کے ارادہ کا نام ہے زبان سے کہنا شرط نہیں۔ یہاں بھی وہی مراد ہے۔ مگر زبان سے کہہ لینا مستحب ہے۔

مسئلہ : اگر کسی کے ماہ رمضان کے کیٔ روزے قضا ہو گئے ہیں تو نیت میں یہ ہونا چاہیئے کہ یہ روزہ فلاں رمضان کے فلاں روزے کی قضا ہے۔ اگر نیت میں سال اور دن متعین نہ کر سکے تو بھی کوئی حرج نہیں۔