وزیراعظم کی قادیانیت نوازیاں

اسلامی جمہوریہ پاکستان میں اب قادیانی الیکشن لڑپائیں گے آج نیا قانون پاس ہوا، قادیانیوں کے لیے سرکاری نوکری کے لیے خصوصی کوٹہ مختص

یہ خبر اگر درست ہے تو اس فیصلے پر غور کریں۔

اس کمیشن کی شقوں کو اگر تفصیل سے پڑھا جائے تو اس میں ہر اقلیتی جماعت کو علی اعلان اپنی سرگرمیاں منعقد کرنے کی اجازت ہے اور ریاست ان کو حتی الوسع تعاون بھی فراہم کریگی۔

اب یہ بات قادیانیون کے حوالے سے بڑی تشویشناک ہے

جس طرح ہندو ” ہولی ” یا ” دیوالی ” کا تہوار ،

عیسائی ” ایسٹر ” یا ” کرسمس ” کا تہوار علی الاعلان منا سکتے ہیں۔

کیا آئندہ قادیانی اعلانیہ ” سالانہ جلسہ ” بھی منعقد کر سکیں گے؟

مرزا قادیانی کی پیدائش کا دن اور موت کا دن منا سکیں گے؟

ساتھ اس فیصلے سے قادیانیوں کو آئین کیمطابق اب اپنی شناخت بحیثیت اقلیت تسلیم کرنا ہوگی۔ جبکہ اس آئینی شق کو وہ مانتے ہی نہیں اور خود کو مسلمان کہتے ہیں اور اقلیت نہیں مانتے اسلئے انکو اقلیت والے حقوق بھی نہیں دیئے جا سکتے کیونکہ وہ ناصرف غیر مسلمان ہیں بلکہ مرتد بھی ہیں . اسلئے انکو کسی بھی طرح قانونی حیثیت نہیں دی جا سکتی .

آخر یہ کیا کیا جا رہا ہے؟؟؟؟؟؟؟