حدیث نمبر211

بخاری کی روایت میں حضرت ابوہریرہ سے ہے فرمایا تم میں سے کسی کو نماز میں جمائی آئے تو بقدر طاقت دفع کرے اور نہ کہے”ھا”کیونکہ یہ شیطان سے ہے کہ وہ اس سے ہنستا ہے ۱؎

شرح

۱؎ چنانچہ اگر نماز میں “ہاہ” منہ سے نکل جائے تو نماز جاتی رہے گی کہ اس میں تین حروف ادا ہوگئے اور اگر فقط “ہا” نکلا تو نماز مکروہ ہوگئی۔