دنیا بڑی بے وقعت

یہ دنیا بڑی بے وقعت ہے اللہ کی بارگاہ میں اسے کوئے عزت حاصل نہیں ہے،اور اسی لئے اس سے اللہ والے کو بھی ملتا ہے اور کبھی اللہ کے دشمن کو دیندار سے زیادہ ملتا ہے،اس بے وقعت کو لینے میں میں مشغول ہوکر آخرت کی طرف توجہ نہ کرنا حماقت ہے الدنیا جیفۃ و طلابھا کالکلاب دنیا مردار ہے اور اسکے طالب کتوں کی طرح ہیں،اللہ نے ہمیں دنیا میں بھیجا اور دعوت اسکی نہیں آکرت کی عطا فرمائی اس سے جانا جا سکتا ہے کہ آخرت کتنی قابل قدر ہے جس کی خدا تعالیٰ ہمیں دعوت دے رہا ہے،فرماتا ہے اللہ یدعوا الیٰ دار السلام اللہ سلامتی کے گھر کی دعوت دے رہا ہے،اللہ نے دعوت دی تو اسکی دعوت کی قبولیت میں ہمیں کیا کرنا چاہیئے؟ اس کی طرف جانا چاہیئے،دنیا میں قدم بھی آخرت کی یاد کے ساتھ رکھنا چاہیئے

یہ بتایا جا چکا کے عورتوں میں دینداری کی بہت کم ہے اور انک کمی کا احساس سب کو ہے اور خاص طور پر اللہ کے نبی کو بھی ہے کہ اس کمی کو آپنے مثا ل دے کر سمجھایا کہ جیسی سفید پر کا کوا نادر ہے ایسے نیک عورت ہے عورتوں میں،عورتوں کی دین میںکمی کی وجہ سے ہمارے پیارے آقا ﷺ نے عورتوں کو انکا نام لیکر تعیین کے ساتھ خطاب فرمایا کہ انہیں نیک عورت کے آخرت کے مقام و مرتبہ کو معلوم کر کے اس میں اپنا نام عمل صالح سے لکھانے کا شوق پیدا ہو