مکہ کی تعظیم

حضرت عیاش بن ابی ربیعہ مخزومی رضی اللہ تعالیٰ عنہ فرماتے ہیں کہ سرکار ﷺ نے فرمایا کہ اس امت سے خیروبرکت زائل نہ ہوگی جب تک کہ یہ حرم مکہ کی تعظیم کرتی رہے گی جیسا کہ اس کی تعظیم کا حق ہے اور جب اس کی تعظیم کو چھوڑدے گی تو ہلاک ہوجائے گی۔ (مشکوٰۃ شریف ص؍۲۳۸)

میرے پیارے آقاﷺ کے پیارے دیوانو! مذکورہ حدیث شریف سے معلوم ہوا کہ حرم مکہ کی تعظیم کے سبب اللہ عزوجل خیروبرکت نازل فرماتا رہے گا۔ آج بہت سے کم علم، حرم مکہ کے مقام کو نہ جاننے کی وجہ سے اس کاا حترام جیسا کرنا چاہئے ویسا نہیں کرتے۔ چلّا چلّاکر دنیوی باتیں کرتے،یہ غلطیاں حرم مکہ میں دوران طواف کرتے ہوئے نظر آتے ہیں خدارا! خدارا! حرم کا احترام لازم ہے ضرور اس کا احترام کریں۔ (اللہ نہ کرے کہ بے ادبی کی وجہ سے ہلاک ہوجانے کا اندیشہ ہے )اللہ  جملہ مسلمانوں کوحرم کا احترام کرنے کی توفیق عطافرمائے۔

آمین بجاہ النبی الکریم علیہ افضل الصلوٰۃ والتسلیم