أَعـوذُ بِاللهِ مِنَ الشَّيْـطانِ الرَّجيـم

بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِيْمِ

يٰۤـاَبَتِ لَا تَعۡبُدِ الشَّيۡطٰنَ‌ ؕ اِنَّ الشَّيۡطٰنَ كَانَ لِلرَّحۡمٰنِ عَصِيًّا ۞

ترجمہ:

اے میرے ابا ! آپ شیطان کی پیروی نہ کریں، بیشک شیطان رحمٰن کا نافرمان ہے

تفسیر:

اللہ تعالیٰ کا ارشاد ہے : (حضرت ابراہیم نے کہا) اے میرے ابا ! آپ شیطان کی پیروی نہ کریں بیشک شیطان رحمٰن کا نافرمان ہے (مریم : ٤٤ )

آزر کو شیطان سے متنفر کرنے کی وجہ 

حضرت ابراہیم (علیہ السلام) نے شیطان سے متنفر کرنے کے لئے آزر سے یہ کہا کہ شیطان اللہ تعالیٰ کا نافرمان ہے، کیونکہ کسی شخص سے متنفر ہونے کی یہی سب سے بڑی وجہ ہے اور جب شیطان اللہ تعالیٰ کا نافرمان تھا تو کسی چیز میں بھی اس کی اطاعت جائز نہیں ہے اور آزر کے جو عقائد تھے وہ شیطان کی اطاعت سے ہی مستفاد تھے اس لئے حضرت ابراہیم نے آزر کو شیطان سے متنفر کرنا چاہا، اس کے بعد کہا :

تبیان القرآن – سورۃ نمبر 19 مريم آیت نمبر 44