أَعـوذُ بِاللهِ مِنَ الشَّيْـطانِ الرَّجيـم

بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِيْمِ

وَكَاَيِّنۡ مِّنۡ قَرۡيَةٍ اَمۡلَيۡتُ لَهَا وَهِىَ ظَالِمَةٌ ثُمَّ اَخَذۡتُهَا‌ۚ وَاِلَىَّ الۡمَصِيۡرُ۞

 ترجمہ:

اور میں نے ایسی بہت سی بستیوں کو مہلت دی تھی جو ظالم تھیں، پھر میں نے ان کو پکڑ یا اور میری ہی طرف لوٹ کر آنا ہے

الحج :48 میں فرمایا : اور میں نے ایسی بہت سی بستیوں کو مہلت دی تھی جو ظالم تھیں پھر میں نے ان کو پکڑ لیا۔

اس سے مراد یہ ہے کہ کتنی ہی ایسی بستیاں تھیں جو کفر اور ظلم کرتی تھیں اور اس کے باوجود میں نے ان کو مہلت دی اور ان سے عذاب کو مئوخر رکھا اور اس مہلت سے انہوں نے دھوکا کھایا اور اپنے کفر اور ظلم پر ڈٹے رہے پھر میں نے ان کو اچانک پکڑ لیا اور ان پر اپنا عذاب نازل کردیا۔ پس ان کا عذاب روکا ہوا ہے اور بالآخر انہوں نے میری ہی طرف لوٹنا ہے۔

القرآن – سورۃ نمبر 22 الحج آیت نمبر 48