أَعـوذُ بِاللهِ مِنَ الشَّيْـطانِ الرَّجيـم

بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِيْمِ

قِيۡلَ لَهَا ادۡخُلِى الصَّرۡحَ‌ ۚ فَلَمَّا رَاَتۡهُ حَسِبَـتۡهُ لُـجَّةً وَّكَشَفَتۡ عَنۡ سَاقَيۡهَا ‌ؕ قَالَ اِنَّهٗ صَرۡحٌ مُّمَرَّدٌ مِّنۡ قَوَارِيۡرَ ؕ قَالَتۡ رَبِّ اِنِّىۡ ظَلَمۡتُ نَـفۡسِىۡ وَ اَسۡلَمۡتُ مَعَ سُلَيۡمٰنَ لِلّٰهِ رَبِّ الۡعٰلَمِيۡنَ۞

ترجمہ:

اس سے کہا گیا اس محل میں داخل ہوجا، سو جب اس نے اس (شیشے کے فرش) کو دیکھا تو اس نے اس کو گہرا پانی گمان کیا اور اپنی دونوں پنڈلیوں سے کپڑا اونچا کرلیا، سلیمان نے کہا بیشک یہ شیشے سے بنا ہوا چکنا محل ہے، بلقیس نے کہ کا اے میرے رب میں نے اپنی جان پر ظلم کیا، میں سلمان کے ساتھ اللہ پر ایمان لے آئی جو رب العلمین ہے

تفسیر

القرآن – سورۃ نمبر 27 النمل آیت نمبر 44