أَعـوذُ بِاللهِ مِنَ الشَّيْـطانِ الرَّجيـم

بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِيْمِ

يُخۡرِجُ الۡحَـىَّ مِنَ الۡمَيِّتِ وَيُخۡرِجُ الۡمَيِّتَ مِنَ الۡحَـىِّ وَيُحۡىِ الۡاَرۡضَ بَعۡدَ مَوۡتِهَا ‌ؕ وَكَذٰلِكَ تُخۡرَجُوۡنَ۞

ترجمہ:

وہ زندہ کو مردہ سے نکالتا ہے اور مردہ کو زندہ سے نکالتا ہے ‘ اور زمین کو اس کے مردہ ہوجانے کے بعد زندہ کرتا ہے اور اسی طرح تم (قبروں سے) نکالے جائو گے

اس کے بعد فرمایا : وہ زندہ کو مردہ سے نکالتا ہے اور مردہ کو زندہ سے نکالتا ہے اور زمین کو اس کے مردہ ہوجانے کے بعد زندہ کرتا ہے اور اسی طرح تم (قبروں سے) نکالے جائو گے (الروم : ١٩)

اس آیت میں بھی حشر و نشر پر دلیل ہے جس طرح وہ مردہ زمین کو دوبارہ زندہ کردیتا ہے اسی طر مردہ انسانوں کو بھی دوبارہ زندہ فرمائے گا ‘ اس کی مزید تفسیر آل عمران : ٢٧ میں ملاحظہ فرمائیں۔

القرآن – سورۃ نمبر 30 الروم آیت نمبر 19