زبان کو ذکر الٰہی سے تر رکھو

حضرت عبداللہ بن بُسر رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ہے کہ ایک شخص رسول اللہ ﷺ کی بار گاہ میں حاضر ہوااور عرض کیا یا رسول اللہ ﷺ اسلام کے مجھ پر بہت سے احکام ہیں آپ ا مجھے ایسی بات بتادیں جس پر میں تکیہ کروں تب رسول اللہﷺ نے فرمایا تمہاری زبان اللہ تعالیٰ کی یاد میں ہمیشہ تر رہے۔ (ترمذی شریف)

میرے پیارے آقا ﷺ کے پیارے دیوانو !صحابئہ کرام رضی اللہ تعالیٰ علیہم اجمعین نیکیوں کے متعلق فکر مند رہتے اسی لئے اسلامی احکام کی بجا آوری کے ساتھ وہ مزید اوقات نیک کاموں میں گزار نے کے خواہش مند رہتے تھے۔ صحابۂ کرام رضی اللہ تعالیٰ عنہم کے سوالات سے ہم گنہگاروں کا فائدہ ہوگیا کہ ہمیں بھی زندگی کے لمحات گزار نے کا طریقہ نصیب ہو گیا۔

مذکورہ حدیث شریف میں میرے پیارے آقا انے ذکر الٰہی سے زبان تر رکھنے کا ہمیشہ کے لئے حکم فرمایا اس سے مراد یہ ہے کہ تم دل وزبان کو کبھی خالی مت رکھوجب دنیوی کاموں سے فراغت ملے اپنے اللہ عزوجل کے کا موں میں مشغول ہو جائو کہ یہ ذکر دونوں جہاں میں تمہارے لئے کامیابی کا سبب بن جائے گا اللہ تعالیٰ ہم سب کو توفیق عطا فرمائے۔ آمِیْن بِجَاہِ النَّبِیِّ الْکَرِیْمِ عَلَیْہِ اَفْضَلُ الصَّلٰوۃِ وَ التَّسْلِیْمِ