والد کی اطاعت اللہ کی اطاعت ہے

حضرت ابو ہریرہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے مروی ہے کہ رسول اللہ ﷺ نے فرمایا۔

طَاعَۃُ اللّٰہِ طَاعَۃُ الْوَالِدِ وَ مَعْصِیَۃُ اللّٰہِ مَعْصِیَۃُ الْوَالِدِ (طبرانی)

والد کی اطاعت اللہ عز وجل کی اطاعت ہے اور باپ کی نافرمانی خدائے وحدہ لا شریک کی نافرمانی ہے۔

میرے پیارے آقا ﷺ کے پیارے دیوانو! آج کے دور میں والد کی بات کو ماننے میں لوگ بہت ہی سستی اور تأمل کرتے ہیں، انہیں والد کے درجے کا علم نہیں ہوتا اللہ کے رسول ا نے والد کی بات ماننے کو رب کی بات ماننے کا درجہ دے کر اور والد کی بات نہ ماننے کو رب کی نافرمانی کا درجہ دیکر اپنی اُمت کو آگاہ فرمادیا کہ والد کے حکم کو معمولی نہ سمجھو لہٰذا ہمیں اس بات کا خیا ل رکھنا چاہئے کہ والد کی ہر جائز بات ماننے کی کوشش کرنی چاہئے اور ان کی نافرمانی کے وبال سے اپنے آپ کو بچاناچاہئے۔ اللہ ہم سب کو والد کی اطاعت کرنے کی توفیق عطا فرمائے۔

آمین بجاہ النبی الکریم علیہ وعلیٰ آلہ افضل الصلوۃ والتسلیم۔