انبیاء کے قاتل

تحریر:محمد اسمٰعیل بدایونی

یا اللہ خیر ! دادی جان کے منہ سے اچانک نکلا ۔

کیا ہوا؟ دادی جان !

اللہ تعالیٰ ان یہودیوں کو غرق کرے ان ظالموں نے فلسطین پر پھر حملہ کر دیا ۔

گھر میں موجود سب کی توجہ ایک مرتبہ پھر اسکرین پر تھی ۔۔۔

فلسطین کے مسلمان شعلوں میں گھرے ہوئے تھے مسجد اقصی کو اسرائیلی فوجی اپنے بوٹوں سے روند رہے تھے ۔۔۔مسلمانوں کو ماررہے تھے ۔۔۔کہیں مسلمانوں کی بستیوں پر آسمان پر جا کر آگ برسا رہے تھے ۔۔۔بارود گرارہے تھے۔۔۔ روزے کی حالت میں شہادت سے انہیں افطار کرایا جا رہاہے ۔۔۔کچھ ہی دیر میں مسلمان بستیاں خاک اور خون میں تبدیل ہو رہی تھیں ۔۔۔ مناظر دیکھ کر سب ہی کی آنکھیں نم تھیں ۔

یہ کیسی جنگ ہے امی جان ! میں نے کہا۔

نہیں میرے بچے یہ جنگ نہیں ہے جنگ تو دو برابر والوں میں ہوتی ہے یہاں ایک کے ہاتھ میں جدید اسلحہ اور دوسرے فریق کے ہاتھ میں صرف پتھر ہیں ۔

یہ جنگ نہیں ہو رہی یہ ظلم ہو رہاہے یہودی ظالم ہیں جو مسلمانوں پر ظلم کررہے ہیں ۔امی جان نے جواب دیا ۔

ارے بہو! یہ تو اتنے ظالم ہیں کہ انہوں نے اللہ کے نبیوں کو قتل کیا ہے ۔۔۔

اللہ کے نبیوں کو قتل کیا ہے ؟ میں نے حیرت سے پوچھا۔

ہاں ! انہوں نے اللہ کے نبیوں یعنی معصومین کو قتل کیا ہے قرآن نے ان کے اس برے فعل کے بارے میں بیان کیا ۔

اِنَّ الَّذِیْنَ یَكْفُرُوْنَ بِاٰیٰتِ اللّٰهِ وَ یَقْتُلُوْنَ النَّبِیّٖنَ بِغَیْرِ حَقٍّۙ-وَّ یَقْتُلُوْنَ الَّذِیْنَ یَاْمُرُوْنَ بِالْقِسْطِ مِنَ النَّاسِۙ-فَبَشِّرْهُمْ بِعَذَابٍ اَلِیْمٍ(۲۱)سورہ بقرہ

وہ جو اللہ کی آیتوں سے منکر ہوتے اور پیغمبروں کو ناحق شہید کرتے اور انصاف کا حکم کرنے والوں کو قتل کرتے ہیں انہیں خوشخبری دو دردناک عذاب کی

مفسرین کرام نے تو اس آیت کی تفسیر میں یہ بھی لکھاہے

ایک دن میں یہ ستر نبیوں کو قتل کر دیتے تھے اور پھر شام میں بازار بھی کھول لیتے تھے ایک دفعہ انہوں نے ایک ہی دن میں صبح کے وقت 40 نبیوں کو قتل کیا ان کے اس عمل کی مذمت کی گئی اور 112 عابدوں نے اٹھ کر انہیں نیکی کا حکم دیا اور برائی سے منع کیا تو اسی روز شام میں ان عابدوں کو بھی قتل کر دیا۔

یا اللہ ! کتنےظالم اورجابر لوگ تھے ۔۔۔تانیہ نے بھی گفتگو میں شریک ہوتے ہوئے کہا ۔

اب خود سوچو ! جس قوم نے اللہ تعالیٰ کے نبیوں کو قتل کیا وہ کسی اور کو چھوڑیں گے ؟

بالکل دادی جان ! یہ تو کسی کو نہیں چھوڑیں گے ۔۔۔

بلکہ تمہیں بتاؤں انہوں نے تو کئی بار ہمارے پیارے نبیﷺ کو بھی شہید کرنے کی کوشش کی لیکن اس میں میں کامیاب نہیں ہو سکے ۔

کیا دادی جان ! انہوں نے ہمارے پیارے نبی ﷺکو بھی شہید کرنے کی کوشش کی ؟ جاوید جو گھر میں سب سے چھوٹا تھا اس نے بھی مٹھیاں بھینچتے ہوئے کہا ۔

اللہ تعالیٰ کسی مجاہد کو بھیج دے امت میں جو امت کی مدد کرے سوا ارب سے زیادہ مسلمان ان دو کروڑ یہودی ظالموں کو سبق سکھانے میں ناکام ہیں ۔۔۔

کاش کے مسلم حکمرانوں میں کچھ غیرت ہوتی تو آج فلسطین کے مسلمان یوںآگ اور خون میں نہیں نہاتے ۔۔۔جو لوگ نا جائز اسرائیل کو تسلیم کرنے کے لیے دلائل دیتے ہیں وہ اس ظلم پر کیوں خاموش رہتے ہیں ۔۔۔امی نے کہا ۔

کوئی غیر مسلم مر جائے تو پوری دنیا کا میڈیا شور مچاتا ہے لیکن مسلمانوں کی بستیوں کو آگ اور خون میں نہلا دیا جائے تو مہذب دنیا سے کوئی نہیں اٹھتا ۔۔۔تانیہ نے کہا

ہاں بالکل ! ایسا ہی ہے کیونکہ ہم متحد ہو نے کو تیار نہیں ۔۔۔وہ اسلام کے خلاف ایک ہیں اور ہم اسلام کے لیے ایک نہیں ہیں ۔دادی جان نے کہا ۔

دادی جان ان کے اعمال کے بارے میں بھی بتائیے نا ! میں نے یہودیوں کے بارے میں مزید جاننے کی خواہش کا اظہار کیا۔

ہاں ! بالکل ان شاء اللہ کل سے روزانہ ان کے بارے میں تمہیں بتاؤں گی کہ یہ قوم کیسی ہے اور ساتھ ہی اپنی اصلاح کی بھی کوشش کرنا ان سے اللہ تعالیٰ ناراض کیوں ہوا۔۔۔

ہمیں وہ عمل نہیں کرنا جس کی وجہ سے اللہ تعالیٰ یہودیوں سے ناراض ہوا۔.. قرآن نے کئی مقامات پر ان کے ظلم اور برے اعمال بالخصوص اللہ تعالی اور انبیاء کرام کی نافرمانی کا تذکرہ کیا ہے.

تربیت آپ کے بچوں کی بنیادی ضرورت ہے سنہری فہم القرآن اور سنہری صحاح ستہ اس ضرورت کو پوری کرتی ہے آج ہی یہ کتابیں منگوائیے

فری ہوم ڈیلیوری ابھی آرڈر کیجیے03082462723 فہیم بھائی