📿ربیع الاول کی مناسبت سے اسباق سیرت کا سبق#8️⃣
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
#eidmiladunnabi2022
📜*رسول اللہ صلی اللہ تعالی علیہ وسلم کی پسندیدہ غذائیں*
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
✅آپ نے چونکہ زاہدانہ اور سادہ طرزِ زندگی اختیار فرمایا اس لئے کبھی پُرتکلّف کھانوں کی خواھش نہیں فرمائی، البتہ بعض چیزیں آپ صلی اللہ تعالی علیہ وسلم کو بہت پسند تھیں۔۔۔ اور حقیقت یہ ھے کہ جب سے ھم نے ایسی صحت مند چیزوں سے کنارہ کشی کی ھے تب سے بیماریاں بڑھتی جارہی ھیں، کاش کہ ھم رسول اکرم صلی اللہ تعالی علیہ وسلم کی سیرت کے اس پہلو پر بھی توجہ کریں اور نقصان دہ چیزوں کی بجائے ان چیزوں کو اپنی غذاؤں میں شامل کریں۔۔۔ چند چیزیں ھم یہاں ذکر کررھے ھیں:

◀️”حِیس”اھل عرب کے ھاں ایک قسم کا میٹھا کھانا تھا جوکہ گھی، پنیر اور کھجور ملاکر پکایاجاتا تھا۔ رسول اللہ صلی اللہ تعالی علیہ وسلم اس کو بہت رغبت کے ساتھ تناول فرماتے تھے۔

⬅️اس کے علاوہ کھجور، شہد، سرکہ، روغن زیتون اورلوکی بہت پسند فرماتے تھے، حتی کہ کسی سالن میں لوکی شامل ھوتی تو آپ لوکی کے ٹکرے تلاش فرمایا کرتے تھے۔

❇️گوشت میں آپ نے بکری کی دستی، دنبہ، اونٹ، خرگوش، مُرغ، بٹیر اور مچھلی مختلف اوقات میں تناول فرمائی ھے۔

🔅بعض اوقات آپ صلی اللہ تعالی علیہ وسلم تربوز کو کھجور کے ساتھ ملاکر اور کبھی کھجور کے ساتھ ککڑی ملاکر تناول فرماتے تھے۔

⏪پھلوں میں آپ نے انگور، انار وغیرہ تناول فرمائے ھیں، اس کے علاوہ بعض اوقات آپ نے کشمش اور کھجور کو پانی میں ڈالکر اس کا رس نوش فرمایاھے۔

↩️ایک درزی نے آپ صلی اللہ تعالی علیہ وسلم کی دعوت کی، جس میں اُس نے جَو کی روٹی، لوکی والا شوربہ اور خشک گوشت پیش کیا۔

✳️* قربانی کے جانور کے پائے کچھ دن کے لئے آپ نے رکھوادئیے، پھر کچھ روز بعد آپ نے پکواکر تناول فرمائے۔

✅* میٹھی چیزوں میں جہاں ” حیس” کا ذکرملتاھے وھاں ” ھریسہ” اور “وطیئہ” کا ذکر بھی ملتاھے۔ ہریسہ مختلف اناج کے دانوں کا مرکّب تھا جس میں گوشت کے ٹکڑے شامل ھوتے تھے، اور وطیئہ کھجوروں کا میٹھا تھا جس میں کھجوروں کو پیس کر دودھ سے گوندھا جاتاتھا۔

♻️* آپ صلی اللہ تعالی علیہ وسلم کی پسندیدہ غذاؤں میں ایک معروف طعام “ثَرید ” تھا، جس میں شوربے میں روٹی کے ٹکڑے ڈالے جاتے ھیں، طِبّی اعتبار سے بھی کھانے کا یہ انداز بہت مفید ھے، کیونکہ یہ جلد ھضم ھوجاتاھے۔

✅ان تمام معلومات کے ساتھ ھمیں کھانے پینے کے وہ آداب بھی ملحوظ رکھنے چاھئیں جو رسول اللہ تعالی علیہ وسلم سے منقول ھیں، جیسے کھانے سے پہلے ھاتھ دھونا، بسم اللہ پڑھ کر سیدھے ھاتھ سے تناول کرنا، گرم ھوتو پھونکیں نہ مارنا، کھانے کے دوران اچھی بات کرنا، کھانے کے بعد ھاتھ دھونا،
✅خاص طور پر کوئی لُقمہ یا ٹکڑا گرجائے تو اُسے اُٹھاکر صاف کرکے کھالیاجائے، کیونکہ آپ صلی اللہ تعالی علیہ وسلم نے فرمایا: اَکْرِمُوا الخُبْز ( روٹی کی تعظیم کرو) اللہ پاک ھمیں بھی رزق کی قدر کرنے کی توفیق عطافرمائے، آمین

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔