*ختم شریف اس طرح بھی دلایا جا سکتا ہے!*

پچھلے چند دنوں سے احباب کی خدمت میں عرض کر رہا ہوں کہ اپنے فوت شدہ پیاروں پر رحم کھایا کریں’ ختم شریف میں ان کا نام استعمال کر کے کھانا باہم مل جل کھا لینے کی بجانے ان کے لیے خوبصورت انداز میں قرآن خوانی کا اہتمام کیا کریں. اس وقت رسم پورا کرنے کی بجائے ان لوگوں کی ہی مہمان نوازی کریں جو آپ کے پیاروں کے ساتھ خیر خواہی کا جذبہ رکھتے ہوئے ان کے لیے قرآن مجید پڑھنے کے لیے ٹائم نکالنے کے لیے آمادہ ہوں ……
عین اختتامی دعا کے وقت لنگر پر حملہ آور قوم کو اس کام کے لیے تنگ نہ کیا کریں ان کے ذمہ ملک و ملت کی بہتری کے لیے کرنے کے اور بھی بہت سے کام ہیں .. کیونکہ ختم شریف کا اصل مقصد ہی قرآنی خوانی اور
اوراد وظائف کا ثواب مرحومین کو پہنچانا ہے .
الحمدللہ ! بہت سے باشعور احباب نے اس کی طرف سے توجہ کی ہے ‘ لیکن اس میں پرابلم یہ آ رہی ہے کہ محلے میں قرآن پڑھنے والے ملیں کہاں سے ؟؟؟
کیوں کہ ہمارا عمومی مزاج پڑھنے کی بجائے کھانے کا ہے. اس پریشانی سے نجات کے لیے احباب کو یہ حل بتایا ہے کہ آپ ہفتہ وار ‘ ماہانہ اور سالانہ ختم دلانے کے لیے مدارس دینیہ میں جا کر قرآن خوانی کروا لیا کریں اور وہاں موجود طلباء و طالبات کے لیے حسبِ استطاعت کھانے کا اہتمام کر دیا کریں… آپ کے اس ایک عمل کے کئی فوائد ہوں گے مثلًا : قرآنی خوانی ‘ طلباء و طالبات کی خوشی ‘ اللہ پاک کے دین کی مدد اور اہلِ مدارس کی خیر خواہی . لیکن ان طلباء و طالبات کو کبھی اپنے گھر بلا کر قرآنی خوانی پر مجبور نہ کریں. اس سے ان کا تعلیمی وقت بھی ضائع ہو گا اور ساتھ ساتھ اور بھی کئی خرابیاں جنم لیں گی . آپ کے گھر جا کر جو کام تین گھنٹے میں ہونا ہے اس سے کئی گنا بہتر کام مدرسے میں آدھے گھنٹےمیں ہو جائے گا. باقی ثواب و برکت کی پریشانی نہ کریں اگر آپ کی نیت خالص ہے تو اللہ پاک کے خزانوں میں کوئی کمی نہیں.
فقیر کے اسی مشورے پر عمل کرتے ہوئے بہت سے احباب نے اپنی سابقہ روش بدلنے اور رسم و رواج سے نجات حاصل کرنے کا ارداہ کیا ہے .
پچھلے دنوں ہمارے بھائی وقاص صاحب نے اپنے بڑے بھائی جان کے لیے ہمارے جامعہ صراط الاسلام پیرمولا وٹالہ میں قرآن خوانی کی محفل منعقد کروائی تھی ‘ کل ہمارے بھائی سعید اکرام مغل صاحب نے چند دن پہلے فوت ہونے والی اپنی مرحومہ بہن کے لیے قرآن خوانی کی محفل منعقد کروائی اور طالبات کے لیے خوبصورت مہمان نوازی کا اہتمام کیا ‘ ہمارے اپنے محلے پیرمولا کے تقریبًا تمام افراد اس کام کے لیے آمادہ ہو چکے ہیں . یہاں طالبات کی تعداد ذیادہ ہونے کی وجہ سے ایک گھںنٹے میں کئی قرآن مجید مکمل ہو جاتے ہیں. ان کا یہ عمل قابلِ تحسین ہے’ اللہ پاک ان کے مرحومین کی کامل بخشش فرمائے اور اپنے فوت شدہ پیاروں کی خیر خواہی کے لیے اس طرح کے فائدہ بخش اقدامات کی توفیق عطا فرمائے آمین.
دعا گو : حافظ محمد تنویر قادری وٹالوی
مہتمم : جامعہ صراط الاسلام پیرمولا وٹالہ
03414165880