آئینہ قیامت
sulemansubhani نے Tuesday، 25 August 2020 کو شائع کیا.

آئینہ قیامت از حضرت علامہ مولانا حسن رضا خان (برادر اعلی حضرت علیہ الرحمہ) آئینہ قیامت

مکمل تحریر پڑھیے »


 جو کہے سن کے مدعا مطلب
sulemansubhani نے Monday، 16 March 2020 کو شائع کیا.

 جو کہے سن کے مدعا مطلب شہنشاہ سخن ستاذ زمن علامہ حسن رضا بریلوی ❤️ جو کہے سن کے مدعا مطلب       میرے مطلب سے اُس کو کیا مطلب ❤️ مل گیا دل نکل گیا مطلب      آپ کو اب کسی سے کیا مطلب ❤️ جو نہ نکلے کبھی نہ پورا ہو […]

مکمل تحریر پڑھیے »


 دیکھے اگر یہ گرمیِ بازار آفتاب
sulemansubhani نے Wednesday، 11 March 2020 کو شائع کیا.

 دیکھے اگر یہ گرمیِ بازار آفتاب استاذ زمن شہنشاہ سخن علامہ حسن رضا بریلوی  ❤️ دیکھے اگر یہ گرمیِ بازار آفتاب سر بیچ کر ہو تیرا خریدار آفتاب ❤️ کب تھے نصیب مہر یہ انوار، یہ عروج تو جس کو چاہے کر دے مرے یار آفتاب ❤️ کس نے نقابِ عارضِ روشن اٹھا دیا ہر […]

مکمل تحریر پڑھیے »


سن لیا ہم نے سوالِ وصلِ دل بَر کا جواب
sulemansubhani نے Saturday، 7 March 2020 کو شائع کیا.

سن لیا ہم نے سوالِ وصلِ دل بَر کا جواب نا اُمیدی کہہ گئی دل سے مقدر کا جواب ❤️ دیکھ کر تم دیدۂ پُر آب کو ہنسنے لگے کیا یہی تھا گریۂ عشاقِ مضطر کا جواب ❤️ کچھ ترس آیا نزاکت پر بڑھا کچھ جوشِ قتل ورنہ تیرِ آہ تھا قاتل کے خنجر کا […]

مکمل تحریر پڑھیے »


 جب مرا مہر جلوہ گر ہو گا
sulemansubhani نے Sunday، 26 January 2020 کو شائع کیا.

 جب مرا مہر جلوہ گر ہو گا کلام از: استاد زمن علامہ حسن رضا بریلوی ❤️ جب مرا مہر جلوہ گر ہو گا دوپہر ہو گا جو پہر ہو گا ❤️ تا زباں جو نہ آ سکا دل سے اُسی نالے میں تو اَثر ہو گا ❤️ مر گیا کون کچھ خبر بھی ہے کوئی […]

مکمل تحریر پڑھیے »


کسی شب بغل میں وہ دل بر نہ ہو گا
sulemansubhani نے Saturday، 11 January 2020 کو شائع کیا.

کسی شب بغل میں وہ دل بر نہ ہو گا کلام : استاد زمن علامہ حسن رضا بریلوی ❤️ کسی شب بغل میں وہ دل بر نہ ہو گا کوئی دن خوشی کا میسر نہ ہو گا ❤️ تیرے در پہ جب تک مرا سر نہ ہو گا مجھے تاجِ عزت میسر نہ ہو گا ❤️ […]

مکمل تحریر پڑھیے »


مریض ہجر اُمید سحر نہیں رکھتا
sulemansubhani نے Thursday، 2 January 2020 کو شائع کیا.

مریض ہجر اُمید سحر نہیں رکھتا کلام: شاگرد داغ استاذ زمن علامہ حسن رضا بریلوی ❤️ مریض ہجر اُمید سحر نہیں رکھتا غضب ہے پھر بھی وہ غافل خبر نہیں رکھتا ❤️ یہ پھنک رہا ہوں تپِ عشق و سوزِ فرقت میں کہ مجھ پہ ہاتھ کوئی چارہ گر نہیں رکھتا ❤️ گلہ ہے اُس […]

مکمل تحریر پڑھیے »


 دمِ مُردن ترے قدموں پر اگر سر ہوتا
sulemansubhani نے Wednesday، 11 December 2019 کو شائع کیا.

 دمِ مُردن ترے قدموں پر اگر سر ہوتا کلام : شاگرد داغ استاذ زمن علامہ حسن رضا بریلوی ❤️ دمِ مُردن ترے قدموں پر اگر سر ہوتا حشر میں تاجِ کرامت مرے سر پر ہوتا ❤️ پھر تو کچھ حالِ مصیبت تجھے باوَر ہوتا تیرے پہلو میں جو میرا دلِ مضطر ہوتا ❤️ کیا ہوا […]

مکمل تحریر پڑھیے »


قاصد سے کہہ رہے تھے سُنا ماجرا سُنا
sulemansubhani نے Monday، 9 December 2019 کو شائع کیا.

قاصد سے کہہ رہے تھے سُنا ماجرا سُنا  کلام” استاذ زمن شہنشاہ سخن علامہ حسن رضا بریلوی ❤️ قاصد سے کہہ رہے تھے سُنا ماجرا سُنا ہم سے توکہیے حضرتِ دل تم نے کیا سنا ❤️ کس نے سنایا اور سنایا تو کیا سنا سنتا ہوں آج تم نے مرا ماجرا سنا ❤️ تم کیا […]

مکمل تحریر پڑھیے »


 چلا آیا کلیجا تھامے تجھ سا فتنہ گر دیکھا   کلام : استاذِ زمن علامہ حسن رضا بریلوی ❤️ چلا آیا کلیجا تھامے تجھ سا فتنہ گر دیکھا دعا میں ہم سے مظلوموں کی ظالم کچھ اَثر دیکھا ❤️ خفا کیوں ہو گئے کس واسطے آنکھیں چُراتے ہو خطا کیا ہو گئی تم کو اگر آدھی نظر […]

مکمل تحریر پڑھیے »