أَعـوذُ بِاللهِ مِنَ الشَّيْـطانِ الرَّجيـم

بِسْمِ اللّٰهِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِيْمِ

لَا شَرِيۡكَ لَهٗ‌ۚ وَبِذٰلِكَ اُمِرۡتُ وَاَنَا اَوَّلُ الۡمُسۡلِمِيۡنَ ۞

ترجمہ:

اس کا کوئی شریک نہیں ہے، اور مجھے یہی حکم دیا گیا ہے اور میں سب سے پہلا مسلمان ہوں۔

تفسیر:

اللہ تعالیٰ کا ارشاد ہے : اس کا کوئی شریک نہیں ہے، اور مجھے یہی حکم دیا گیا ہے اور میں سب سے پہلا مسلمان ہوں۔ (الانعام : ١٦٣) 

نبی کریم (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کا اول المسلمین ہونا : 

اس آیت میں یہ تصریح ہے کہ سیدنا محمد (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) سب سے پہلے مسلمان ہیں۔ اگر یہ اعتراض کیا جائے کہ کیا آپ سے پہلے حضرت ابراہیم (علیہ السلام) اور دیگر انبیاء (علیہم السلام) مسلمان نہیں تھے ؟ تو اس کے حسب ذیل جوابات ہیں : 

(١) ہمارے نبی سیدنا محمد (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) معنی اول الخلق ہیں۔ جیسا کہ اس حدیث میں ہے : 

حضرت ابوہریرہ (رض) بیان کرتے ہیں کہ رسول اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) نے فرمایا : ہم آخر ہیں اور ہم قیامت کے دن سابق ہوں گے۔ (صحیح مسلم ‘ ٩‘ ٨٥٥‘ صحیح البخاری ‘ ج ١‘ رقم الحدیث :‘ ٨٧٦) 

(٢) نبی کریم (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) سب سے پہلے نبی ہیں جیسا کہ ان احادیث میں ہے۔ 

حضرت ابوہریرہ (رض) بیان کرتے ہیں کہ صحابہ نے پوچھا یا رسول اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) آپ کے لیے نبوت کب واجب ہوئی ؟ فرمایا اس وقت آدم روح اور جسد کے درمیان تھے۔ (سنن الترمذی ‘ ج ٥‘ رقم الحدیث :‘ ٣٦٢٩‘ دلائل النبوۃ لابی نعیم ‘ ج ١‘ رقم الحدیث :‘ ٨) 

حضرت ابوہریرہ (رض) بیان کرتے ہیں کہ رسول اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) نے فرمایا : میں خلق کے اعتبار سے تمام نبیوں میں اول ہوں اور بعثت کے اعتبار سے آخر ہوں۔ (کنزالعمال ‘ ج ١١‘ رقم الحدیث ‘ ٣٢١٢٦‘ کامل ابن عدی ‘ ج ٣‘ ص ١٢٠٩) 

قتادہ بیان کرتے ہیں کہ رسول اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) نے فرمایا میں خلق میں سب سے اول ہوں اور بعثت میں سب سے آخر ہوں۔ (کنزالعمال ‘ ج ١١‘ رقم الحدیث ‘ ٣١٩١٦‘ کامل ابن عدی ‘ ج ٣‘ ص ٩١٩‘ طبقات ابن سعد ‘ ج ١‘ ص ١٤٩) 

حضرت عرباض بن ساریہ (رض) بیان کرتے ہیں کہ میں نے رسول اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کو یہ فرماتے ہوئے سنا ہے کہ میں اللہ کے پاس خاتم النبیین لکھا ہوا تھا اور آدم ہنوز مٹی اور گارے میں تھے۔ (دلائل النبوۃ لابی نعیم ‘ ج ١‘ رقم الحدیث : ٩‘ المستدرک ‘ ج ٢‘ ص ٦٠٠‘ مسند احمد ‘ ج ٤‘ ص ١٢٨۔ ١٢٨‘ طبقات ابن سعد ‘ ج ١‘ ص ١٤٩‘ مجمع الزوائد ‘ ج ٨‘ ص ٢٢٣) 

(٣) نبی کریم (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) اپنی امت میں اول المسلمین ہیں۔ یہ قتادہ کا قول ہے۔ (تفسیر امام ابن ابی حاتم ‘ ج ٥‘ رقم الحدیث : ٨١٨٤)

تبیان القرآن – سورۃ نمبر 6 الأنعام آیت نمبر 163