تین محروم انسان

حضرت ابو موسیٰ اشعر ی رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا : تین آدمی جنت میں داخل نہیں ہوں گے (۱) شرابی (۲) رشتہ کو توڑنے والا (۳) جادو گر۔ (الترغیب)

میرے پیارے آقاﷺ کے پیارے دیوانو!مذکورہ حدیث پاک میں جن تین لوگوں کا ذکر ہے وہ یہ ہیں: شراب پینے والے، رشتہ توڑنے والے اور جادوگر، یہ تینوں اعمال معاشرے کو برباد کرنے والے ہیں۔ شرابی نشہ میں نہ جانے کتنے پاکبازوں کی عزت و آبرو سے کھیل جاتا ہے اور اس کی اس بری عادت کے سبب گھر کا سکون تباہ و برباد ہو جاتا ہے۔ یہی حال رشتہ توڑنے والوں کا ہے کہ ٹوٹے ہوئے رشتہ کی وجہ سے ایک دوسرے کے دل میں کدورت اور نفرت ہو جاتی ہے اور نتیجۃ ً دو خاندانوں کا سکون و اطمینان غارت ہو جا تا ہے۔ اور جادو گر کی تباہی تو روشن ہے کہ وہ کسی نہ کسی کو تباہ و برباد کرتا ہی ہے۔ آج کتنے لوگ جادو کی وجہ سے تباہ و برباد ہو رہے ہیں اللہ تبارک و تعالیٰ نے اِن برے اعمال کے مرتکب کے بارے میں بتا دیا کہ تم جنت میں داخل نہیں ہو سکتے۔ اللہ عزوجل ہم سب کو سارے برے اعمال سے بچائے۔

آمِیْن بِجَاہِ النَّبِیِّ الْکَرِیْمِ عَلَیْہِ اَفْضَلُ الصَّلٰوۃِ وَ التَّسْلِیْمِ۔