مہمان نوازی کے مسائل }

مسئلہ : مہمان کو چار باتیں ضروری ہیں جہاں بٹھایا جائے وہیں بیٹھے جو کچھ اس کے سامنے پیش کیا جائے اس پر خوش ہویہ نہ ہو کہ کہنے لگے ا س سے اچھا تومیں اپنے ہی گھر کھایا کرتاہوں یاکسی قسم کے دوسرے الفاظ جیسا کہ آج کل اکثر دعوتوں میںلوگ آپس میںکہا کرتے ہیں۔ بغیر اجازت صاحبِ خانہ وہاں سے نہ اُٹھے اورجب وہاں سے جائے تواس کے لئے دُعا کرے۔

مہمان کی خاطر داری }

اورفرمایا جو شخص اللہ اور قیامت کے دن پرایمان رکھتاہے وہ مہمان کا اکرام کرے ۔ ایک دن رات اس کا جائزہ ہے (یعنی ایک دن اس کی پوری خاطرداری کرے اپنے مقدور بھر اس کے لئے تکلف کاکھانا تیار کرائے) ضیافت تین دن ہے (یعنی ایک دن کے بعد ماحضر پیش کرے اورتین دن کے بعد صدقہ ہے) مہمان کے لئے یہ حلال نہیں کہ اس کے ٹہرارہے اُسے حرج میں ڈال دے۔(بخاری ومُسلم)